پاکستان نے ورلڈ بینک کی قرض کی پیشکش ٹھکرا دی

پاکستان کی جانب سےکورونا ویکسین کی فنڈنگ سے متعلق ورلڈ بینک کی قرض کی پیشکش ٹھکرا دی گئی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق ورلڈ بینک نے پاکستان کے لیے نئے قرض کی فراہمی پر رضامندی کا اظہار کرتے ہوئے پاکستان کو ویکسین فنڈنگ کے لیے نئے قرض کی پیشکش کی ۔ لیکن پاکستان کی جانب سے ورلڈ کی اس پیشکش کو قبول کرنے سے انکار کردیا گیا۔
نئے قرض کی پیشکش قبول کرنے سے معذرت کرنے کے ساتھ ہی پاکستان نے ورلڈ بینک سے ماضی کے قرض کے ازسر نو استعمال کی اجازت مانگی ۔ جسے ورلڈ بینک نے قبول کرلیا۔ورلڈ بینک نے پاکستان کو ماضی کے قرض کے نئے استعمال کی اجازت دے دی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق وزارت صحت کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ ورلڈ بینک نے پاکستان کو پی آر پی کے لیے 155 ملین ڈالر قرض دیا تھا، جس میں سے پاکستان کے پاس پی آر ای پی کے 153 ملین ڈالر محفوظ ہیں۔
وزارت صحت نے پلاننگ کمیشن میں جمع پی سی ون واپس لینےکا فیصلہ کیا ہے، وزارت صحت نے پلاننگ کمیشن میں 138 ملین ڈالرکا پی سی ون جمع کرایا تھا۔ وزارت داخلہ ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان نے کورونا ویکسین کی فنڈنگ کیلئے ورلڈ بینک سے 153 ملین ڈالر امداد مانگی تھی، حکومت نے اقتصادی امور ڈویژن کے ذریعے ورلڈ بینک سے رابطہ کیا تھا، عالمی سطح پر ممکنہ کورونا ویکسین کی ایڈوانس بکنگ کاعمل جاری ہے ۔