شیرخوار بچے رات میں کیوں روتے ہیں ؟

شیر خوار بچوں کی پرورش والدین کیلئے کسی چیلنج سے کم نہیں ہوتی، والدین کیلئے سب سے بڑی آزمائش ان کی رات کی نیند ہوتی ہے- یہ بات اکثر دیکھنے میں آئی ہے کہ جیسے ہی ماں باپ سونے کا ارادہ کرتے ہیں بچہ منہ پھاڑ کر رونا شروع کر دیتا ہے اور ناتجربہ کار والدین طرح طرح کے ٹوٹکے کرنے پر مجبور ہو جاتے ہیں ۔

شیر خوار بچہ رات میں کیوں روتا ہے اور اس کو چپ کروانے کے لیے کیا کرنا چاہیے۔

شیر خوار بچہ اپنی ضروریات رو کر بتاتا ہے، اس کے رونے کا مطلب یہی ہوتا ہے کہ اسے کسی قسم کی تکلیف کا پریشانی ہے جن کا پتہ بچے کے رونے کے انداز سے لگایا جا سکتا ہے- مگر یاد رکھیں کہ دن بھر میں دو سے تین گھنٹے تک کا رونا بچے کے لیے ایک روٹین کی بات ہے اس کے لیے پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے اور عام طور پر بچہ رات میں ہی اپنے یہ دو سے تین گھنٹے پورے کرتا ہے۔

اگر آپ کا بچہ ہر رات ایک مقررہ وقت پر رونا شروع کر دیتا ہے اور اسی طرح مقررہ وقت پر رونا بند کر کے سو جاتا ہے تو اس کو اس وقت جاگنے کی عادت ہے- اس کے لیے پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے وقت کے ساتھ ساتھ بچہ اپنی روٹین ٹھیک کر کے رات میں سونے لگے گا۔

3 Likes

Best one :ok_hand::heart:

thanks dear

1 Like